Pakistan News

رحمن ملک پر فرد جرم عائد کرنے کا حکم

اسلام آباد: پاکستان کی عدالت عظمی نے توہین عدالت کیس میں سابق وزیر داخلہ رحمن ملک کی غیر مشروط معافی مسترد کرتے ہوئے ان پر فرد جرم عائد کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

یاد رہے کہ سپریم کورٹ نے پاکستان اسٹیل ملز کرپشن کیس کی تحقیقات میں مبینہ طور پر بے جا مداخلت پررحمن ملک کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا تھا۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں واقع سپریم کورٹ میں چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی سربراہی میں بینچ نے رحمن ملک کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت کی۔

سماعت کے دوران عدالت عظمیٰ نے رحمن ملک کا جواب غیر تسلی بخش قرار دیتے ہوئے اٹارنی جنرل کو استغاثہ مقرر کر دیا، ان پر 7 روز بعد فرد جرم عائد کی جائے گی۔

اس موقع پر سابق وزیرداخلہ نے مؤقف اختیار کیا کہ انہوں نے عدالت سے غیر مشروط معافی مانگ کر خود کو عدالت کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا ہے،عدالت نے عدلیہ کو گالیاں دینے والے بڑے بڑے لوگوں کو معاف کردیا۔

جس پر  چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ معافی نامہ اعتراف ہوتا ہے، قبول کرنا یا نہ کرنا عدالت کا اختیار ہوتا ہے، اگر آپ کا بھی دل چاہ رہا ہے تو گالیاں دے لیں پھر ہم بھی دیکھ لیں گے۔

Most Popular

To Top